پالیکیلے ٹیسٹ: سری لنکا کی عمدہ بیٹنگ

Posted by on Jul 10, 2012 | Comments Off on پالیکیلے ٹیسٹ: سری لنکا کی عمدہ بیٹنگ

پاکستان اور سری لنکا کے مابین ٹیسٹ سیریز کے تیسرے اور آخری میچ کے تیسرے روز سری لنکا کے بلے بازوں تھیلان سمراویرا اور ترنگا پراوتانہ نے عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنی ٹیم کو گزشتہ سب کی مشکلات سے نکال لیا ہے۔

اب سے کچھ دیر پہلے تک سری لنکا نے تین وکٹوں کے نقصان پر ایک سو اکاسی رنز بنا رکھے تھے اور دونوں بلے باز نصف سنچریاں بنائے کریز پر موجود تھے۔

آج صبح جب کھیل کا آغاز کیا گیا تو سری لنکا نے پہلی اننگز میں تین وکٹوں کے نقصان پر چوالیس رنز بنا رکھے تھے۔

میچ کے دوسرے روز بارش کی وجہ سے کھیل منسوخ کر دیا گیا تھا۔

اس سے پہلے پاکستان کی ٹیم میچ کے پہلے روز اپنی پہلی اننگز میں دو سو چھبیس رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی تھی۔

اتوار کو کھیل کے آغاز پر سری لنکا کے کپتان مہیلا جیاوردھنے نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی جو کہ صحیح فیصلہ ثابت ہوا۔

پاکستان کی بیٹنگ کا ایک بار پھر آغاز اچھا نہ تھا اور چھپن رنز پر اس کی چار وکٹیں گر چکی تھیں۔ پاکستان کی جانب سے حفیظ بائیس رنز، اظہر علی اور یونس خان صفر پر جبکہ توفیق عمر انتیس رنز پر آؤٹ ہوئے۔

تاہم اس موقع پر کپتان مصباح الحق اور اسد شفیق نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے پچاسی رنز کی شراکت قائم کی۔

اسد شفیق پاکستانی اننگز کے بہترین بلے باز رہے اور انہوں نے پچھہتر رنز بنائے اور پاکستان کی پوری ٹیم دو سو چھبیس رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

جواب میں سری لنکا کا آغاز بھی اچھا نہ تھا اور چودہ کے مجموعی سکور پر جنید خان نے یکے بعد دیگرے دو وکٹیں لے کر میزبان ٹیم کو مشکل میں ڈال دیا۔

پاکستان کو اس کی تیسری کامیابی کھیل کے اختتامی لمحات میں ملی جب محمد سمیع نے مہیلا جیاوردھنے کو آؤٹ کیا۔

تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں سری لنکا کو ایک صفر سے برتری حاصل ہے۔

گال میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ میچ میں سری لنکا نے پاکستان کو دو سو نو رنز سے شکست دی تھی جبکہ کولمبو میں کھیلا جانے والا دوسرا ٹیسٹ میچ ڈرا ہو گیا ہے۔

اس سے پہلے پاکستان اس دورے پر سری لنکا سے ایک روزہ میچوں کی سیریز تین ایک سے ہار چکا ہے۔

گال ٹیسٹ میچ میں پاکستان کی بیٹنگ لائن نے مایوس کن کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا لیکن کولمبو ٹیسٹ میچ میں پاکستانی بے بازوں نے بہتر کارکردگی دیکھائی۔

اس ٹیسٹ میچ کے آخری روز پاکستان نے میزبان ٹیم کو فتح کے لیے دو سو اکسٹھ رنز کا ہدف فراہم کیا تھا۔

سری لنکا نے ہدف کے تعاقب میں کھیل کے اختتام پر دو وکٹوں کے نقصان پر چھیاسی رنز بنائے۔

میچ بارش کی وجہ سے متاثر ہوا اور کھیل کو متعدد بار خراب موسم کے باعث روکنا پڑا تھا۔

Advertisement

Subscription

You can subscribe by e-mail to receive news updates and breaking stories.

————————Important———————–

Enter Analytics/Stat Tracking Code Here