رینجرز کیس: فرد جرم عائد نہ ہوسکی

Posted by on Jun 26, 2011 | Comments Off on رینجرز کیس: فرد جرم عائد نہ ہوسکی

کراچی میں انسدادِ دہشت گردی کی عدالت میں سرفراز شاہ قتل کیس کے ساتوں ملزمان پر جمعہ کے روز بھی فردِ جرم عائد نہیں ہوسکی۔
وکیلِ استغاثہ محمد خان نے بی بی سی کے نامہ نگار حسن کاظمی کو بتایا کہ بدھ کو ملزمان رینجرز کے اہلکار بہاالرحمان، لیاقت علی، شاہد ظفر، محمد افضل، محمد طارق، منٹھار علی اور سویلین شخص افسر خان کو سینٹرل جیل کراچی سے انسدادِ دہشت گردی کی عدالت نمبر ایک جسٹس بشیراحمد کھوسو کی عدالت میں پیش کیا گیا تھا۔
نامہ نگار کے مطابق جمعہ کو بھی سات میں سے چار ملزمان عدالت میں اپنا وکیل پیش نہیں کرسکے جس پر عدالت میں انہیں سرکاری خرچ پر وکیل مہیا کرنے کا حکم دیتے ہوئے آئندہ سماعت اٹھائیس جون تک ملتوی کردی۔
عدالت کا کہنا تھا کہ آئندہ سماعت پر فردِ جرم عائد کی جائیگی جس کے بعد مقدمے کی کارروائی اٹھائیس جون تک ملتوی کرکے ملزمان کو جیل بھیج دیاگیا اور جیل حکام کو ہدایت کی کہ وہ کل ملزمان کو عدالت میں پیش کریں۔
اس سے پہلے بدھ کو عدالت نے تمام نامزد ملزمان کو گواہوں کے بیانات کی نقول اور مقدمے کی دیگر تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا تھا کہ ملزمان پر ایک روز بعد (جمعرات) کو فرد جرم عائد کی جائیگی مگر ایسا نہ ہوسکا۔
یاد رہے کہ ان سات ملزمان میں سے چھ رینجرز اہلکار ہیں جن پر کراچی کے بینظیر بھٹو شہید پارک میں سرفراز شاہ کو گولیاں مارکر ہلاک کردیا تھا ۔ اس واقعے کی ویڈیو مختلف چینلز پر نشر ہونے کے بعد عوام کی جانب سے شدید ردِ عمل سامنے آیا تھا جس کے بعد سپریم کورٹ نے معاملے کا از خود نوٹس لیتے ہوئے اس کیس کو ایک ماہ میں مکمل کرنے کا حکم صادر کیا تھا۔

Advertisement

Subscription

You can subscribe by e-mail to receive news updates and breaking stories.

————————Important———————–

Enter Analytics/Stat Tracking Code Here