تضحیک آمیز پریس کانفرنس پر سپریم کورٹ کی ازخود کارروائی

Posted by on Jun 13, 2012 | Comments Off on تضحیک آمیز پریس کانفرنس پر سپریم کورٹ کی ازخود کارروائی

ملک ریاض نے منگل کو عدالت عظمیٰ میں ڈاکٹرارسلان کے خلاف ’’دستاویزی شواہد‘‘ اپنے وکیل کے ذریعے جمع کرانے کے چند گھنٹوں کے بعد نیوز کانفرنس سے خطاب کیا تھا۔

پاکستان کی عدالت عظمٰی نے ملک کی معروف کاروباری شخصیت اور ’بحریہ ٹاؤن‘ منصوبے کے خالق ملک ریاض کی مبینہ تضحیک آمیز پریس کانفرنس کا ازخود نوٹس لیتے ہوئے بدھ کو ہی اس مقدمے کی ابتدائی سماعت کی۔

 چیف جسٹس کے بیٹے پر ان الزامات کے منظر عام پر آنے کے بعد عدالت عظمٰی نے ازخود کارروائی کرتے ہوئے ڈاکٹر ارسلان اور ملک ریاض کا موقف سننے کے لیے انھیں عدالت میں پیش ہونے کے احکامات جاری کیے۔ ان ہدایت پر عمل کرتے ہوئے پہلے چیف جسٹس کے بیٹے نے اپنا بیان عدالت عظمیٰ میں جمع کرایا جس میں انھوں نے اپنے خلاف لگائے گئے تمام الزامات کی تردید کی۔

اسلام آباد کے ایک فائیو اسٹار ہوٹل میں منگل کو ہنگامی طور پر بلائی گئی پریس کانفرنس میں ملک ریاض نے قرآن پاک ہاتھ میں اٹھا کر کہا تھا کہ سپریم کورٹ کے چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کے بڑے بیٹے ڈاکٹر ارسلان افتخار اُنھیں’’بلیک میل‘‘ کر کے اُن سے کروڑوں روپے اور دیگر فوائد حاصل کرتے رہے ہیں۔

ان کے بقول ڈاکٹر ارسلان ان سے یہ کہہ کر بھاری رقوم وصول کرتے رہے کہ وہ سپریم کورٹ میں ملک ریاض کے خلاف زیر التوا مقدمات کے فیصلے ان کے حق میں کروانے کے لیے اپنے والد کو راضی کریں گے۔

Advertisement

Subscription

You can subscribe by e-mail to receive news updates and breaking stories.

————————Important———————–

Enter Analytics/Stat Tracking Code Here