افغان پناہ گزینوں کے اندراج کی مہلت ختم

Posted by on Jul 01, 2012 | Comments Off on افغان پناہ گزینوں کے اندراج کی مہلت ختم

 خیبر پختونخواہ حکومت کی جانب سے افغان پناہ گزینوں کے لیے رجسٹریشن کی مہلت سنیچر کو ختم ہوگئی ہے۔

سنہ دو ہزار دو سے پاکستان سے افغان پناہ گزین رضاکارانہ بنیادوں پر واپس جا رہے ہیں۔ گزشتہ دس سالوں میں تقریباً چالیس لاکھ پناہ گزین واپس افغانستان جا چکے ہیں تاہم سترہ لاکھ ابھی بھی قانونی طور پر پاکستان میں مقیم ہیں۔

اندازوں کے مطابق اس کے بعد تقریباً دس لاکھ افغان پناہ گزینوں کو ملک بدر کیا جا سکتا ہے۔

صوبائی حکومت کے حکام کا کہنا ہے کہ رجسٹریشن کے بغیر مقیم افغان پناہ گزینوں کو اب چھوٹ نہیں دی جائے گی اور ان کے خلاف کارروائی کی جا سکتی ہے۔

اس فیصلے سے ان سترہ لاکھ افغان پناہ گزینوں پر کوئی فرق نہیں پڑے گا جو قانونی طور پر رجسٹریشن کروا کر پاکستان میں مقیم ہیں۔

کچھ حلقوں میں حکومتی سطح پر ان نئی کوششوں پر تشویش کا اظہار کیا گیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر بغیر اندراج کے رہنے والوں پر سختی کی گئی تو پولیس کے افغان پناہ گزینوں کو ہراساں کرنے کے واقعات میں اضافہ ہوگا۔

پاکستان نے سرد جنگ اور طالبان دور میں افغانستان سے آنے والے لاکھوں مہاجرین کو پناہ دی تاہم ان کی واپسی کی گرتی ہوئی شرح کم ہونے پر حکومتِ پاکستان پریشان ہے۔

افغان پناہ گزینوں کو اب ’اقتصادی مہاجرین‘ مانا جاتا ہے کیونکہ بیشتر ذریعہِ معاش کے بہتر مواقعے کی تلاش میں پاکستان آئے ہیں۔

پاکستان اور ایران افغانستان کے غیر مستحکم ادوار میں تارکینِ وطن کے لیے اپنی سرحدیں کھولتے رہے ہیں۔

قانونی طور پر اندراج کروانے والے پناہ گزینوں کو خصوصی کارڈ دیے جاتے ہیں جو کہ اس سال کے آخر میں کارآمد نہیں رہیں گے۔ آئندہ سال کی حکمتِ عملی کے بارے میں پاکستانی حکومت کی جانب سے کوئی واضح حکمتِ عملی سامنے نہیں آئی۔

Advertisement

Subscription

You can subscribe by e-mail to receive news updates and breaking stories.

————————Important———————–

Enter Analytics/Stat Tracking Code Here