ارسلان کیس: ’غیرملکی ادارے سے تحقیق کرالیں‘

Posted by on Sep 05, 2012 | Comments Off on ارسلان کیس: ’غیرملکی ادارے سے تحقیق کرالیں‘

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کی سابق صدر عاصمہ جہانگیر نے کہا ہے کہ چیف جسٹس پاکستان کے بیٹے ارسلان افتخار کیس میں قومی اداروں پر اعتماد نہیں ہے تو پھر اس معاملے کی چھان بین غیر ملکی تحقیقاتی ادارے سے کرالی جائیں۔

جمعرات کو سپریم کورٹ کے دو رکنی بینچ نے چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کے بیٹے ڈاکٹر ارسلان افتخار اور نجی تعمیراتی کمپنی کے سابق سربراہ ملک ریاض کے درمیان بتیس کروڑ روپے سے زائد رقم کی مبینہ لین دین کی تحقیقات نیب سے واپس لے کر ڈاکٹر شعیب سڈل کو تحقیقات کرنے کا حکم دیا تھا۔

لاہور ہائی کورٹ بار میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے عاصمہ جہانگیر نے کہا کہ اگر سپریم کورٹ کو قومی احتساب بیورو یعنی نیب اور ایف آئی اے کی تحقیقات پر اعتماد نہیں ہے تو پھر سکاٹ لینڈ یارڈ کی ٹیم سے تحقیقاتی کرالی جائیں۔

عاصمہ جہانگیر نے یہ بات ارسلان افتخار کیس کی تحقیقات کے لیے ایک رکنی کمیشن تشکیل دینے کے فیصلے پر نکتہ چینی کرتے ہوئے کہی۔

عاصمہ جہانگیر نے اعتراض اٹھایا کہ اگر نیب کی تحقیقاتی ٹیم پر اعتماد نہیں تھا تو ٹیم تبدیل کی جاسکتی تھی لیکن پورے کا پورا فیصلہ تبدیل کرنا درست نہیں ہے۔

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدر عاصمہ نے کہا کہ شعیب سڈل کے چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کی فیملی کے ساتھ قریبی مراسم ہیں اور بقول ان کے ڈاکٹر شعیب سڈل ارسلان افتخار کی شادی کی تمام تقریبات میں شریک تھے۔

Advertisement

Subscription

You can subscribe by e-mail to receive news updates and breaking stories.

————————Important———————–

Enter Analytics/Stat Tracking Code Here